جب نظارے تھے تو آنکھوں کو نہیں تھی پروا

zafar-iqbal poetry

جب نظارے تھے تو آنکھوں کو نہیں تھی پروا
اب انہی آنکھوں نے چاہا تو نظارے نہیں تھے

تبصرہ کریں