غم نہ کر تیرے لیے چراغ بن جاؤں گا

tum bin ham - urdu ghazal

غم نہ کر تیرے لیے چراغ بن جاؤں گا
خود جل کر تیری راہ میں روشنی کر جاؤں گا

ڈر ہے کہ مجھ سے رسوائیاں نہ ملیں تمہیں
ترک تعلق میں خود ہی سے کر جاؤں گا

تیرے آنچل میں ہوں پھول خواہش میری
اپنا دامن میں کانٹوں سے بھر جاؤں گا

لاکھ بھلانے سے بھی نہ بھول سکو گی تم
میں پیار ہی تم سے اتنا کر جاؤں گا

سنوارو اپنا نصیب تم خوشی سے ایمان
میں کہ برف پہ بنی تصویر آخر مٹ جاؤں گا

تبصرہ کریں