طلب دنیا کو کر کے زن مریدی ہو نہیں سکتی

haider ali aatish shayari - 8

طلب دنیا کو کر کے زن مریدی ہو نہیں سکتی
خیال آبروئے ہمت مردانہ آتا ہے

guest
0 Comments
Inline Feedbacks
تمام تبصرے دیکھیں