ایک ہنگامہ پہ موقوف ہے گھر کی رونق

mirza-ghalib-33

ایک ہنگامہ پہ موقوف ہے گھر کی رونق
نوحۂ غم ہی سہی نغمۂ شادی نہ سہی

تبصرہ کریں