خوابوں کا گلستان ہے تو ، ارمانوں کا چمن

Patriotic Nazm

خوابوں کا گلستان ہے تو ، ارمانوں کا چمن
جنت سے کم نہیں ہے تو میرے لیے وطن

پربت ہمالیہ عزم کا پرچم کہیں جسے
گنگ و جمن کہیں پیار کا سنگم کہیں جسے

جھرنوں سے پھوٹے ہے نئی امید کی کرن
جنت سے کم نہیں ہے تو میرے لیے وطن

گوتم رحیم نانک اور چشتی کبیر
پیغام لائے پیار محبت کا سب فقیر

انسانیت سے مہکا ہے یوں ہند کا چمن
جنت سے کم نہیں ہے تو میرے لیے وطن

بڑھنے نہ پائے ہندو مسلمان میں فاصلے
سب ایک ہیں جواں ہیں ابھی اپنے حوصلہ

ہم ایک ہیں ہم ایک ہیں گونجے وہی سدا
اپنے وطن پہ کر دینگے ہم جان تن فدا

اپنے سروں سے باندھ کے نکلے ہیں ہم کفن
جنت سے کم نہیں ہے تو میرے لیے وطن

guest
0 Comments
Inline Feedbacks
تمام تبصرے دیکھیں