ہم آہ بھی کرتے ہیں تو ہو جاتے ہیں بد نام

Akbar-Allahabadi-badnam shayari

ہم آہ بھی کرتے ہیں تو ہو جاتے ہیں بد نام
وہ قتل بھی کرتے ہیں تو چرچا نہیں ہوتا

تبصرہ کریں