محبت میں ایسی چوٹ کھائی ہوئی ہے

urdu-ghazal

محبت میں ایسی چوٹ کھائی ہوئی ہے
غم ہیں ساتھی خوشی پرائی ہوئی ہے

سوچتے ہیں كے اب ہَم کدھر جائیں گے
کسی اور دِل میں نہ جگہ بنائی ہوئی ہے

نہ کوئی میت ہے نہ کسی سے پریت ہے
میرے دِل پہ اُداسی چھائی ہوئی ہے

رات دن کسی کی یاد میں روتے روتے
ختم میری آنكھوں کی بینائی ہوئی ہے

زندگی میں آج بھی اصغر کو تیرا انتظار ہے
ورنہ کب کی جان لبوں پہ آئی ہوئی ہے

تبصرہ کریں