دروازہ کھٹکھٹا کے ستارے چلے گئے

adil-mansuri shayari

دروازہ کھٹکھٹا کے ستارے چلے گئے
خوابوں کی شال اوڑھ کے میں اونگھتا رہا

تبصرہ کریں