بھیڑ ہے بر سر بازار کہیں اور چلیں

bheer hai bar sare bazar

بھیڑ ہے بر سر بازار کہیں اور چلیں
آ مرے دل مرے غم خوار کہیں اور چلیں

تبصرہ کریں