میں نئے معصوم بہاروں میں تمہیں دیکھا ہے

4-line-poetry-in-urdu1

میں نئے معصوم بہاروں میں تمہیں دیکھا ہے
میں نے پرنم ستاروں میں تمہیں دیکھا ہے
میرے محبوب تیری پردہ نشینی کی قسم
میں نے اشکوں کی قطاروں میں تمہیں دیکھا ہے

تبصرہ کریں