آج بھی ویسا ہی موسم ہے

آج بھی ویسا ہی موسم ہے
آج بھی ویسی ہی بادل ہیں
آج بھی ویسی ہی بارش ہے
جب ہم پہلی بار ملے تھے
یاد ہے ہم نے یہ سوچا تھا
ہم کو ملتے دیکھ كے موسم
اتنا خوش ہے ، اتنا خوش كے
اس کی آنکھیں بیگھ گئیں ہیں
آج مگر ہم جان گئے ہیں
موسم اس دن کیوں رویا تھا

تبصرہ کریں