رانجھا رانجھا کر دی ہن میں ، آپے رانجھا ہوئی

ranjha ranjha kardi bulleh-shah poetry - رانجھا رانجھا کر دی ہن میں آپے رانجھا ہوئی

رانجھا رانجھا کر دی ہن میں ، آپے رانجھا ہوئی
سدّو نی مینوں دھیدو رانجھا ، ہیر نہ آکھو کوئی

رانجھا میں وچ ، میں رانجھے وچ ، غیر خیال نہ کوئی
میں نہیں اوہ آپ ہے اپنی آپ کرے دل جوئی

جو کجھ ساڈے اندر وسّے ، ذات اساڈی سوئی
جس دے نال میں نیونہہ لگایا ، اوہو جیسی ہوئی

چٹی چادر لاہ سُٹ کُڑیے، پہن فقیراں لوئی
چٹی چادر داغ لگیسی، لوئی داغ نہ کوئی

تخت ہزارے لے چل بلھیا ، سیالِیں ملے نہ ڈھوئی
رانجھا رانجھا کر دی ہن میں ، آپے رانجھا ہوئی

تبصرہ کریں