مری زندگی تو گزری ترے ہجر کے سہارے

jigar-moradabadi shayari

مری زندگی تو گزری ترے ہجر کے سہارے
مری موت کو بھی پیارے کوئی چاہیئے بہانہ

تبصرہ کریں