ماہ تو ٹھہرا ہے بادلوں میں عامر

mah rukh milay

ماہ تو ٹھہرا ہے بادلوں میں عامر
ماہ رخ ہی کاش کہ مجھے ملے کوئی

تبصرہ کریں