کہانی ہو داستان ہو  تم

دور ہو پھر بھی پاس لگتے ہو
دن کے اجالے میں
دھندلی سی شام لگتے ہو
کوی کہانی ہو داستان ہو  تم
اپنے آپ میں پوری اک کتاب لگتے ہو

تبصرہ کریں