جاتی ہے دھوپ اجلے پروں کو سمیٹ کے

shakeb jalali

جاتی ہے دھوپ اجلے پروں کو سمیٹ کے
زخموں کو اب گنوں گا میں بستر پہ لیٹ کے

تبصرہ کریں