ہر دسمبر اسی وحشت میں گزارا کہ کہیں

december-wehshat

ہر دسمبر اسی وحشت میں گزارا کہ کہیں
پھر سے آنکھوں میں تیرے خواب نہ آنے لگ جائیں

guest
0 Comments
Inline Feedbacks
تمام تبصرے دیکھیں