دشمنی جم کر کرو لیکن یہ گنجائش رہے

dost ho jayen

دشمنی جم کر کرو لیکن یہ گنجائش رہے
جب کبھی ہم دوست ہو جائیں تو شرمندہ نہ ہوں

تبصرہ کریں