چھوڑ اس بات کو اے دوست کہ تجھ سے پہلے

habib-jalib-dost

چھوڑ اس بات کو اے دوست کہ تجھ سے پہلے
ہم نے کس کس کو خیالوں میں بسائے رکھا

تبصرہ کریں