ابھی ارمان کچھ باقی ہیں دل میں

arman baqi shakib

ابھی ارمان کچھ باقی ہیں دل میں
مجھے پھر آزمایا جا رہا ہے

تبصرہ کریں