آواز دے كے چُھپ گئی ہر بار زندگی

آواز دے كے چُھپ گئی ہر بار زندگی
ہَم ایسا سادہ دِل تھے كے ہر بار آ گئے

تبصرہ کریں