قہر ہے ، موت ہے ، قضا ہے عشق

momin-khan-momin-poetry

قہر ہے ، موت ہے ، قضا ہے عشق
سچ تو یہ ہے ، بری بلا ہے عشق

دیکھئے کس جگہ ڈبو دے گا
میری کشتی کا نا خدا ہے عشق

تبصرہ کریں