دِل پریشان ہے شب و روز کی یک رنگی سے

tanhai-poetry

دِل پریشان ہے شب و روز کی یک رنگی سے
کل بھی تنہائی تھی اور آج بھی تنہائی ہے

تبصرہ کریں