ہمیں تو کب سے پتہ ہے کے تو بے وفا ہے محسن

ہمیں تو کب سے پتہ ہے کے تو بے وفا ہے محسن
تجھے چاہا اِس لیے شاید تیری فطرت بَدَل جائے

تبصرہ کریں