بس ختم کر یہ بازی عشق غالب

mirza ghalib poetry

بس ختم کر یہ بازی عشق غالب
مقدر كے ہارے کبھی جیتا نہیں کرتے

تبصرہ کریں