یہ عہد عجب عہد کمو بیش ہے جاناں

4-line-poetry

یہ عہد عجب عہد کمو بیش ہے جاناں
خود تیری گواہی ترے ہم راز نہ دیں گے
تو بھی ہمیں بن دیکھے گزر جائے گا اک دن
کچھ سوچ كے ہم بھی تجھے آواز نہ دیں گے

تبصرہ کریں