عمر دراز مانگ کے لائے تھے چار دن

عمر دراز مانگ کے لائے تھے چار دن
دو آرزو میں کٹ گئے دو انتظار میں

تبصرہ کریں