تجھے بھولنے کی کوششیں کبھی کامیاب نہ ہو سکیں

تجھے بھولنے کی کوششیں کبھی کامیاب نہ ہو سکیں
تیری یاد شاخِ گلاب ہے جو ہوا چلی تو مہک گئی

تبصرہ کریں