پیار کو پیار ہی رہنے دو کوئی نام نہ دو

pyar-urdu-poetry

ہم نے دیکھی ہے ان آنکھوں کی مہکتی خوشبو
ہاتھ سے چھو کے اسے رشتوں کا الزام نہ دو

صرف احساس ہے یہ روح سے محسوس کرو
پیار کو پیار ہی رہنے دو کوئی نام نہ دو

پیار کوئی بول نہیں ، پیار آواز نہیں
اک خاموشی ہے سنتی ہےکہا کرتی ہے

نہ یہ بوجھتی ہے نہ رکھتی نہ ٹھہری ہے کہیں
نور کی بوند ہے صدیوں سے بہا کرتی ہے

صرف احساس ہے یہ روح سے محسوس کرو
پیار کو پیار ہی رہنے دو کوئی نام نہ دو

مسکراہٹ سی کھلی رہتی ہے آنکھوں میں کہیں
اور پلکوں پہ اجالے سے جکے رہتے ہیں

ہونٹ کچھ کہتے نہیں ، کانپتے ہونٹوں پہ مگر
کتنے خاموش سے افسانے روکے رہتے ہیں

صرف احساس ہے یہ روح سے محسوس کرو
پیار کو پیار ہی رہنے دو کوئی نام نہ دو

ہم نے دیکھی ہے ان آنکھوں کی مہکتی خوشبو
ہاتھ سے چھو کے اسے رشتوں کا الزام نہ دو

صرف احساس ہے یہ روح سے محسوس کرو
پیار کو پیار ہی رہنے دو کوئی نام نہ دو

تبصرہ کریں