کب کون کسی کا ہوتا ہے

kab kon kisi ka hota hai - faraz poetry

کب کون کسی کا ہوتا ہے
سب جھوٹے رشتے ناتے ہیں
سب دل رکھنے کی باتیں ہیں
سب اصلی روپ چھپاتے ہیں
اخلاق سے خالی لوگ یہاں
لفظوں کے تیر چلاتے ہیں
اک بار نگاہوں میں آکر
پھر ساری عمر رلاتے ہیں

تبصرہ کریں